ایران نے یورپی یونین اور برطانوی حکومت کے متعدد افراد پر پابندیوں کا اعلان کر دیا

ایران نے یورپی یونین اور برطانوی حکومت کے متعدد افراد پر پابندیوں کا اعلان کر دیا
ایران کی وزارت خارجہ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے یورپی یونین اور برطانوی حکومت کے متعدد افراد اور اداروں پر پابندی عائد کرنے کا اعلان کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ نے ایک جوابی اقدام کے تحت متعدد یورپی یونین اور برطانوی حکومت کے اہلکاروں اور اداروں پر پابندیاں عائد کردی ہیں۔

وزارت خارجہ کے بیان کے مطابق ان پابندیوں کا اطلاق متعلقہ اداروں کی منظوری کے مطابق اور متعلقہ قواعد و ضوابط اور پابندیوں کے طریقہ کار کے دائرہ کار میں رہتے ہوئے ایک جوابی اقدام کے طور پر کیا جا رہا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ یورپی یونین اور برطانوی حکومت کے مذکورہ ادارے اور افراد پر دہشت گردی اور دہشتگرد گروہوں کی حمایت کرنے پر پابندیوں کی فہرست میں شامل کیا جا رہا ہے۔ یہ افراد اور ادارے ایرانی عوام کے خلاف دہشت گردی، تشدد اور نفرت پھیلانے والے اقدامات پر اکسانے اور ان کی حوصلہ افزائی کرنے، ایران کے اندرونی معاملات میں مداخلت، ایران میں تشدد اور بدامنی کو فروغ دینے، ایران کے بارے میں غلط معلومات کی تشہیر اور نیز ایرانی عوام کے خلاف بطور اقتصادی دہشت گردی، ظالمانہ پابندیوں کے نفاذ اور ان کو شدید کرنے میں ملوث ہیں۔

اسلامی جمہوریہ ایران یورپی یونین اور برطانیہ کی حکومتوں کی جانب سے مذکورہ افراد اور اداروں کی حمایت، سہولت کاری اور ان کی تخریبی کارروائیوں کی روک تھام سے انکار کی مذمت کرتا ہے اور یہ دہشت گردی سے نمٹنے کے حوالے سے بین الاقوامی ذمہ داریوں کی خلاف ورزی ہے۔ ساتھ ہی یہ اعلان کرتا ہے کہ ظالمانہ پابندیاں عائد کرنے اور اس میں اضافہ کرنے والوں کے اقدامات اقوام متحدہ کے چارٹر میں بیان کردہ بین الاقوامی قانون کے بنیادی اصولوں کی صریح خلاف ورزی ہے۔

بیان میں واضح کیا گیا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے تمام ادارے متعلقہ حکام کی منظوری کے مطابق ان پابندیوں کے نفاذ کے لیے ضروری اقدامات کریں گے، جن میں ویزوں کے اجراء پر پابندی، مذکورہ افراد کے اسلامی جمہوریہ ایران میں داخلے کو ناممکن بنانا، ایران کے مالیاتی اور بینکنگ نظام میں ان کے بینک اکاؤنٹس منجمد کرنا اور اسلامی جمہوریہ ایران کے دائرہ اختیار میں آنے والے علاقوں میں ان کی جائیداد اور اثاثوں کو ضبط کرنا شامل ہے۔

Related Posts

پشاور دھماکے کی ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ وزیراعظم کو پیش

پشاور پولیس لائنز میں دھماکے کی ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ وزیراعظم کو پیش کردی گئی۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہےکہ جائے وقوعہ سے خودکش حملے کے شواہد ملے…

ایم کیو ایم رہنما بابر غوری وطن واپس پہنچ گئے

ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما اور سابق وفاقی وزیر بابر غوری وطن واپس پہنچ گئے۔ رپورٹس کے مطابق بابر غوری غیر ملکی ایئر لائن کی پرواز ای…

پاکستان اورآئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات آج سے شروع ہوں گے

پاکستان اور انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ (آئی ایم ایف) کے مذاکرات کا دور آج سے شروع ہو گا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مذاکرات میں نویں اقتصادی جائزے پر بات…

دہشت گردی کے خلاف ضرب عضب جیسے آپریشن کی ضرورت ہے: وزیر دفاع

وزیر دفاع خواجہ آصف نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف ضرب عضب جیسے آپریشن کے لیے اتفاق رائے پیدا کرنے کی ضرورت ہے۔ پشاور پولیس…

دہشت گرد قوم کے عزم کو کمزور نہیں کرسکتے: آرمی چیف

چیف آف آرمی اسٹاف جنرل سید عاصم منیر نے کہا ہے کہ پشاور واقعے کے ذمہ داروں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔ آرمی چیف نے…

پی سی بی نے کامران اکمل کو جونیئرسلیکشن کمیٹی کا سربراہ مقرر کر دیا

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے ریجنل اور ڈسٹرکٹ ٹیموں کے انتخاب کے لیے 8 رکنی سلیکشن کمیٹی کا اعلان کردیا اور سابق ٹیسٹ کرکٹر کامران…